ARTICLESشرعی سوالات

متمتع جانور ذبح نہ کر سکے تو کیا کرے

استفتاء : ۔ کیا فرماتے ہیں علماء دین و مفتیان شرع متین اس مسئلہ میں کہ ایک شخص نے حجِ تمتّع کیا اس پر قربانی لازم ہوئی لیکن وہ غریب ہے قربانی کی اس میں ہمت نہیں تو وہ کیا کرے ؟

(السائل : ایک حاجی، مکہ مکرمہ)

جواب

باسمہ تعالیٰ وتقدس الجواب : متمتع پر قربانی واجب ہے چنانچہ مخدوم محمد ہاشم ٹھٹھوی حنفی متوفی 1174ھ لکھتے ہیں :

پس اگر قارن یا متمتع است واجب باشد ذبح بروے (128)

یعنی، پس اگر حاجی قارن یا متمتع ہے تو اس پر ذبح واجب ہے ۔ اور اگر کوئی شخص محتاج ہو کہ اپنا اسباب بیچ کر بھی قربانی نہ کر سکتا ہو تو قربانی کے بدلے اس پر دس (10)روزے واجب ہوں گے ، چنانچہ قرآن کریم میں ہے

{فَمَنْ لَّمْ یَجِدْ فَصِیَامُ ثَلٰثَۃِ اَیَّامٍ فِی الْحَجِّ وَ سَبْعَۃٍ اِذَا رَجَعْتُمْ تِلْکَ عَشَرَۃٌ کَامِلَۃٌ ط}(129)

ترجمہ : پھر جسے مقدور نہ ہو تو تین روزے حج کے دنوں میں رکھے اور سات جب اپنے گھر پلٹ کر جاؤ، یہ پورے دس ہیں ۔ (کنز الایمان) اس کے تحت مفسِّر صدر الافاضل سید محمد نعیم الدین مراد آبادی حنفی متوفی 1367ھ لکھتے ہیں : یعنی یکم شوال سے نویں ذی الحجہ تک احرام باندھنے کے بعد اس درمیان میں جب چاہے رکھ لے خواہ ایک ساتھ یا متفرق کر کے ، بہتر یہ ہے کہ 7۔8۔۔9 ذی الحجہ کو رکھے ۔ (خزائن العرفان) اور صدر الشریعہ محمد امجد علی حنفی متوفی 1367ھ لکھتے ہیں : محتاج محض جس کی ملکیت میں نہ قربانی کے لائق جانور ہو، نہ اس کے پاس اتنا نقد یا اسباب کہ اُسے بیچ کر لے سکے وہ اگر قران یا تمتع کی نیت کر لے گا تو اس پر قربانی کے بدلے دس روزے واجب ہوں گے ، تین تو حج کے مہینوں میں یعنی یکم شوال سے نویں ذی الحجہ تک احرام باندھنے کے بعد اس بیچ میں جب چاہے رکھ لے ایک ساتھ خواہ جُدا جُدا۔ اور بہتر یہ ہے کہ سات، آٹھ، نو کو رکھے اور باقی سات تیرھویں ذوالحجہ کے بعد جب چاہے رکھے اور بہتر ہے کہ گھر پہنچ کر ہوں ۔ (130) اور خلیفۂ اعلیٰ حضرت علامہ محمد سلیمان اشرف نقل کرتے ہیں :

و الأفضل أن یصوم قبل یوم الترویۃ بیوم و یوم الترویۃ و یوم عرفۃ (الہدایۃ)

افضل یہ ہے کہ تین روزے حج سے قبل رکھے گا انہیں ساتویں آٹھویں اور نویں کو رکھے ۔ (131) لہٰذا اُسے چاہئے کہ وہ قربانی کے بدلے مندرجہ بالا سطور میں ذکر کردہ ترتیب کے مطابق دس (10) روزے رکھے ۔

واللّٰہ تعالی أعلم بالصواب

یوم الثلثاء، 28ذی القعدۃ1427ھ، 19دیسمبر 2006 م (298-F)

حوالہ جات

128۔ حیاۃ القلوب فی زیارۃ المحبوب، باب ہشتم دربیان آنچہ متعلق است از مناسک منیٰ ، فصل سیوم دربیان ذبح ہدی الخ ، ص203

129۔ البقرہ : 2/196

130۔ بہار شریعت،حج کابیان، منیٰ کے اعمال اور حج کے بقیہ افعال،1/1141

131۔ کتاب ’’الحج‘‘ منی میں دسویں تاریخ، ص139

متعلقہ مضامین

Leave a Reply

Back to top button