شرعی سوالات

سوال:وہ کون سی چیزیں ہیں کہ امام کرے تو مقتدی ساتھ نہ دے؟

سوال:وہ کون سی چیزیں ہیں کہ امام کرے تو مقتدی ساتھ نہ دے؟

جواب:وہ چار چیزیں ہیں کہ امام کرے تو مقتدی اس کا ساتھ نہ دے:

(1)نماز میں کوئی زائد سجدہ کیا۔(2)تکبیرات عیدین میں اقوال صحابہ پر زیادتی کی۔ (3)جنازہ میں پانچ تکبیریں کہیں۔ (4)پانچویں رکعت کے لیے بھول کر کھڑا ہوگیا، پھر اس صورت میں اگر قعدہ اخیرہ کر چکا ہے تو مقتدی اس کا انتظار کرے، اگر پانچویں کے سجدہ سے پہلے لوٹ آیا تو مقتدی بھی اس کا ساتھ دے، اس کے ساتھ سلام پھیرے اور اس کے ساتھ سجدہ سہو کرے اور اگر پانچویں کا سجدہ کر لیا تو مقتدی تنہا سلام پھیرلے۔ اور اگر قعدہ اخیرہ نہیں کیا تھا اور پانچویں رکعت کا سجدہ کر لیا تو سب کی نماز فاسد ہوگئی، اگرچہ مقتدی نے تشہد پڑھ کر سلام پھیر لیا ہو۔(الفتاوی الھندیۃ، کتاب الصلاۃ، الباب الخامس فی الإمامۃ، الفصل السادس، ج1، ص90)

متعلقہ مضامین

Leave a Reply

Back to top button